آپ یہاں ہیں
صفحہ اول > شناسائی > مکی سے شناسائی

مکی سے شناسائی

منظرنامہ کے میزبانوں کی جانب سے سلام عرض ہے۔

اگرچہ ٹیکنالوجی کی دنیا میں اردو اب تک وہ مقام حاصل نہیں کرسکی ہے جس کی وہ مستحق ہے لیکن خوش قسمتی سے اردو کو محبت کرنے والے چند ایسے مخلص لوگ ملے ہیں جو غفلت میں پڑی قوم کی جانب سے بھی خدمت انجام دے رہے ہیں۔ ایسے ہی بے لوث افراد میں سے ایک آج ہمارے مہمان ہیں۔ مائیکروسوفٹ ونڈوز آپریٹنگ سسٹم کی بڑے پیمانے پر چوری سے اپنی قوم کو بچانے کے لیے لینکس آپریٹنگ سسٹم کو فروغ دینے کی کوششوں میں ان کا بڑا ہاتھ ہے۔ لینکس کے کئی ذائقے نہ صرف اردو کے قابل بنائے بلکہ لینکس کے چند ذائقے اردو میں بھی ڈھالے جن میں سے اردو سلیکس خاصے کی چیز ہے جسے ونڈوز آپریٹنگ سسٹم کے ہر اس صارف کو ضرور استعمال کرکے دیکھنا چاہئے جو ونڈوز کی چوری کی گئی کاپی پر گزارہ کررہا ہے۔ لینکس کے فروغ کے لیے ایک لینکس فورم بھی چلارہے ہیں جہاں اس آپریٹنگ سسٹم کے مختلف اطلاقیے پیش کیے جاتے ہیں اور مدد فراہم کی جاتی ہے۔ ان کے بلاگ پر بھی لینکس کے حوالہ سے کافی معلومات ملتی ہیں ساتھ ساتھ دیگر کئی سافٹ وئیرز اور دوسری دلچسپ تحاریر بھی پائی جاتی ہیں۔ انہیں بابائے اردو لینکس کہا جاسکتا ہے۔

ہماری مہمان شخصیت نے کئی سوفٹ وئیرز کو اردو روپ دیا اور اردو دان ہونے کا حق ادا کیا۔ ملیے، ہمارے آج کے مہمان ہیں محمد علی مکی۔

السلام علیکم مکی۔ سب سے پہلے تو آپ کو منظرنامہ کی جانب سے خوش آمدید۔

@ نوازش

اس سے قبل کہ ہم بلاگنگ کے حوالہ سے یا دیگر باتیں کریں، پہلے آپ سرزمین عرب اور ارض پاک سے اپنے تعلق کے بارے میں کچھ بتائیں۔

@ کوئی خاص نہیں.. مکہ کی پیدائش ہے، وہیں تعلیم حاصل کی، 1996ء میں پاکستان آیا اور پاکستان کا ہوکر رہ گیا.. ہاں آج کل پھر سعودی عرب کی خاک چھان رہا ہوں.. مگر اس بار ریاض میں.

ان دنوں بھی آپ ریاض میں موجود ہیں، کیا مصروفیات ہیں؟

@ یہ بتانے کی فرصت نہیں.

وہ کیا سوچ اور جذبہ تھا جس نے اردو کی خدمت کے لیے راغب کیا؟

@ اصل میں میری توجہ شروع سے ہی عربی کی طرف رہی ہے.. میں سمجھتا رہا کہ شاید ‘اردو کا حال ٹھیک ہے’ ایک دن خیال آیا کہ کیوں نہ کسی اردو فورم میں شمولیت اختیار کی جائے مگر میں یہ دیکھ کر حیران رہ گیا کہ با وجود تلاش کے مجھے کوئی اردو فورم نہیں ملا.. جو ملے وہ سب انگریزی اور رومن اردو میں تھے.. ان فورمز پر بھی جو موضوعات تھے انہیں پڑھ کر بہت افسوس ہوا.. میسنجرز کے نئے ورژنوں کے علاوہ وہاں اور کوئی بات تھی ہی نہیں.. تب مجھے اندازہ ہوا کہ اردو اتنی پیچھے ہے کہ جس کا حساب نہیں.. اور جو دیگر موضوعات پر ویب سائٹس ملیں وہ ساری کی ساری تصویری اردو میں تھیں.. مجھے کچھ کچھ صورتحال کا اندازہ ہوگیا.. اور میں یہ سوچنے لگا کہ اس سب کو کیسے تبدیل کیا جائے.. کچھ عرصہ سوچنے تک بات ٹلی رہی اور پھر وقتی طور پر بھول گئی.. کچھ عرصہ کے بعد ایک بار پھر صورتحال کا جائزہ لینے بیٹھا تو یہ دیکھ کر خوشی ہوئی کہ ایک عدد اردو فورم منظرِ عام پر آگیا تھا.. آپ سمجھ ہی گئے ہوں گے.. یہ اردو محفل تھا.. میں کافی عرصے تک اس فورم میں شمولیت اختیار کیے بغیر اس کا جائزہ لیتا رہا.. اعجاز اختر، دوست، نبیل، زکریا اور دیگر کئی لوگوں کے نام میں اردو محفل کی ابتداء ہی سے جانتا ہوں.. مگر میں عرب آئیز کے کچھ لمبے پراجیکٹس میں پھنسا ہوا تھا سو شمولیت کو مکمل فراغت تک کے لیے ملتوی کیے رکھا اور وقتاً فوقتاً جائزہ لینے تک خود کو محدود رکھا.. مجھے لگا کہ یہ لوگ منظرنامے کو تبدیل کرنا چاہتے ہیں.. فراغت حاصل ہوتے ہی میں نے محفل میں شمولیت اختیار کر لی، اردو کے حوالے سے مجھے کچھ مسائل درپیش تھے جو زکریا اور نبیل نے حل کرنے میں میری مدد کی.. وہاں رہ کر مجھے محسوس ہوا کہ یہ لوگ کاپی رائٹ اور حقوق کے معاملات کو بڑی سنجیدگی سے لے رہے تھے جو میری اس وقت کی پالیسی کے خلاف تھا.. خیر میں شامل تو رہا اور اب بھی ہوں مگر مجھے لگا کہ وہاں پر میں شاید آزادی سے کام نہ کر سکوں چنانچہ میں نے الگ کام کرنے کا فیصلہ کیا.

اردو کے حوالہ سے آپ کا پہلا پہلا کارنامہ کیا تھا؟

@ اس سوال کے جواب کے لیے اردو پراجیکٹس کا فولڈر کھولا مگر یاد پھر بھی نہیں آیا..

لینکس کی طرف کب مائل ہوئے اور کیونکر خیال آیا؟

@ اچھی طرح یاد نہیں مگر شاید یہ 2000ء کی بات ہے.. میں نے ڈاکٹر مؤید صالح السعدی کا لینکس اور آزاد مصدر پر ایک مضمون پڑھا تھا، وہیں سے عریبین لینکس کے فورم کا پتہ ملا تجربہ کے لیے اسے اتار کر نصب کیا اور پھر یہ سلسلہ چل نکلا.

ونڈوز یا لینکس آپریٹنگ سسٹم؟ کس کا مشورہ دیں گے اور کیوں؟

@ ظاہر ہے لینکس کا ہی مشورہ دوں گا، وجہ سب جانتے ہیں.. یعنی آزادی..

آپ نے کافی سوفٹ وئیر کو اردو قالب میں ڈھالا ہے، کیسے ابتداء کی تھی اس کام کی اور کہاں سے مدد ملی؟

@ سوفٹ ویرز کو اردوانا میرے لیے کوئی مسئلہ نہیں تھا کیونکہ اس سے پہلے میں کئی سوفٹ ویرز کو عربی جامہ پہنا چکا تھا چنانچہ اردو کے حوالے سے کوئی مدد نہیں ملی صرف اتنا کیا کہ بجائے عربی لکھنے کے اردو لکھنا شروع کردیا.. سوفٹ ویرز کو اردوانے کے حوالے سے اردو دان حلقے کی معلومات اب بھی خاصی کم ہے اس حوالے سے ایک عدد مضمون لکھنے کا ارداہ ہے مگر اس کے لیے مجھے ونڈوز کے اندر کام کرنا پڑے گا کیونکہ زیادہ تر لوگ ‘چوری شدہ ونڈوز’ استعمال کر رہے ہیں جو مجھے پسند نہیں اس لیے کافی عرصہ سے یہ معاملہ ٹال رہا ہوں.

بلاگنگ کی طرف کب آئے اور کیا مقصد پیش نظر تھا؟

@ میں اصل میں خواہ مخواہ کا بلاگر ہوں.. گزشتہ سال بلاگر پر یوں ہی بلاگ بنایا، پھر وہاں سے اردو ٹیک پر آیا اور پھر میں نے اور شاکر نے مل کر ذاتی ہوسٹنگ خریدی اور اپنے بلاگ وہیں منتقل کرلیے.. ابتداء میں اس کا کوئی مصرف نظر نہیں آیا، لیکن پھر مجھے اندازہ ہوا کہ ہر چیز فورم پر پوسٹ نہیں کی جاسکتی کیونکہ اردو کوڈر لینکس فورم صرف لینکس کے لیے مخصوص ہے چنانچہ اگر میں کوئی کتاب برقیاتا ہوں تو اسے وہاں پوسٹ نہیں کر سکتا اس کے لیے مجھے بلاگ ہی ایک ایسی مناسب جگہ لگی جہاں میں اپنے دیگر کام رکھ سکتا تھا.

اپنے آپ کو، اردو کے فروغ کے لیے اپنی کوششوں کو اور اپنے پاک وطن کو آنے والے سالوں میں کہاں دیکھتے ہیں؟

@ کافی پیچیدہ سا سوال ہے.. میں آج میں جینے والے شخص ہوں اس لیے کل کے بارے میں کچھ خاص نہیں سوچا سوائے چند چیزوں کے جو بتانا پسند نہیں کروں گا.. اردو کے فروغ کے لیے میری کوششیں کوئی خاص معنی نہیں رکھتیں.. جہاں تک وطن کی بات ہے تو اگر قوم بار بار انہی چوروں کو منتخب کرتی رہی تو مستقبل یقیناً تاریک ہی ہوگا.

کیا بلاگنگ سے آپ کو کوئی فائدہ ہوا ہے؟

@ بلاگنگ ویب کی ایک نئی جہت ہے.. میرا خیال ہے کہ میں اب ساری زندگی بلاگر ہی رہوں گا کیونکہ بلاگر کی آواز کی صدا ضرور ہوتی ہے، میں عربی میں بھی بلاگنگ کر رہا ہوں اور عرب بلاگروں سے بھی اچھے تعلقات استوار ہوگئے ہیں.

وقت کے ساتھ ساتھ اردو بلاگنگ کا دائرہ کافی وسیع ہوا ہے۔ کیسا دیکھتے ہیں موجودہ منظر کو اور نئے آنے والے بلاگرز سے کیا توقعات وابستہ ہیں؟

@ منظرنامہ اب پہلے سے کافی بہتر ہے اور مسلسل بہتری کی طرف جا رہا ہے.. شعور و آگہی میں بہت اضافہ دیکھنے میں آرہا ہے جو بلاگروں کے مضامین سے صاف جھلکتا ہے.. جہاں تک نئے بلاگروں کی بات ہے تو وہ صرف اصل کی نقل ہیں.. آدھے بھاگ جائیں گے.. آخر میں جو بچیں گے وہی اصل بلاگر ہوں گے..

کون سے بلاگز زیادہ دلچسپی سے پڑھتے ہیں؟ کن لکھاریوں کی تحاریر پسند آتی ہیں؟

@ مجھے آوازِ دوست اور ابو شامل کا بلاگ زیادہ پسند ہیں.

کیا آپ کے خیال میں اردو کو وہ مقام ملا ہے، جس کی وہ مستحق تھی؟

@ اردو کے ساتھ مسئلہ یہ ہے کہ اردو دان خود اسے کوئی مقام نہیں دینا چاہتے، جب تک اسے سرکاری زبان قرار نہیں دیا جاتا اور سرکاری اور نجی اداروں میں مراسلے اردو میں نہیں ہوں گے تب تک یہ اسی طرح یتیم ہی رہے گی، وجہ چاہے کچھ بھی ہو اردو ابھی تک اپنے اصل مقام کی منتظر ہے اور شاید ہمیشہ رہے گی کیونکہ برسرِ اقتدار برگر منافقین سے ہمیں اس بارے کوئی امید نہیں رکھنی چاہیے جو نوٹ تو اردو میں گنتے ہیں اور باپ کو ڈیڈی کہہ کر پکارتے ہیں.

اردو کے ساتھ جو رویہ برتا گیا، اس میں کس کس کو قصور وار ٹھہراتے ہیں؟

@ اس کا جواب بہت آسان ہے، اس میں قصور وار خود اردو دان طبقہ ہی ہے جو کبھی سدھرنے والا نہیں.

موجودہ زمانے کی کوئی ایسی شخصیت جس کے اردو پر کام نے آپ کو متاثر کیا ہو؟

@ بلا شبہ نبیل نقوی صاحب سے زیادہ یہاں کسی نے کام نہیں کیا، اس شخص کو شاید خواب بھی اردو کے ہی آتے ہوں گے..

اردو وکیپیڈیا پر مستعمل اردو زبان بے حد تنقید کا شکار رہی ہے اور اب تک یہی صورتحال ہے جس کی وجہ فارسی اور عربی کے ایسے الفاظ کا کثیر استعمال ہے جو یہاں عام نہیں، اس بارے میں کیا مؤقف رکھتے ہیں؟

@ میں نے ابو شامل صاحب سے ایک دفعہ کہا تھا کہ اردو وکیپیڈیا والوں کی عربی مجھ سے بھی بہت اچھی ہے.. اصطلاحات کا مسئلہ صرف اردو میں نہیں بلکہ عربی میں بھی درپیش رہتا ہے فرق صرف اتنا ہے کہ عربی میں الفاظ کی بہتات ہے مسئلہ کسی ایک کے انتخاب کا رہتا ہے جیسے Code کو کوئی شفرہ کوئی نمط اور کوئی تیمہ لکھتا ہے جس کی وجہ سے مسئلہ ہوتا ہے.. بعض اوقات کسی انگریزی لفظ کا بہترین عربی متبادل موجود ہوتا ہے جیسے ٹیلی فون کے لیے ہاتف مگر کوئی ہاتف نہیں بولتا سب ہی تلفون بولتے ہیں ہاں جب بات لکھنے کی آتی ہے تو سبھی ہاتف ہی لکھتے ہیں.. عرب کے بعض علمی حلقے اصطلاحات کی اس افراتفری سے بچنے کے لیے عرب لیگ کی سطح پر ایک ایسے ادارے کی تشکیل کے لیے جد وجہد کر رہے ہیں جسے تمام علمی اصطلاحات کو یکجا کرنے کا اختیار حاصل ہو اور تمام عرب ملکوں میں اسی ادارے کی تسلیم شدہ اصطلاحات استعمال کی جائیں.. جس طرح مائکروسوفٹ کی عربی کو کوئی نہیں مانتا اسی طرح اردو وکیپیڈیا کی اردو کو بھی کوئی تسلیم نہیں کرے گا.. اردو وکیپیڈیا کوئی قومی ادارہ نہیں ہے اور نہ ہی اسے کسی نے یہ اختیار تفویض کیا ہے کہ وہ جس طرح چاہے اردو کی ٹانگ توڑتا پھرے.. مجھے ان کی نیت پر قطعی شک نہیں.. وہ اردو سے محبت کرنے والے لوگ ہیں اور اردو کی خدمت کرنا چاہتے ہیں.. ان کی پیش کردہ بعض اصطلاحات واقعی زبردست ہوتی ہیں.. لیکن یہ ان کا کام نہیں ہے.. عربوں کی طرح ہمیں بھی کسی ایسے ہی ادارے کی تشکیل کے لیے جد وجہد کرنی ہوگی اور اس کے لیے آواز اٹھانی ہوگی تبھی یہ کشتی کسی کنارے لگ سکے گی، اس سلسلے میں میرے پاس کچھ سفارشات ہیں، وقت ملنے پر اس پر ضرور لکھوں گا.

آگے مستقبل میں کیا کیا منصوبے ہیں؟

@ گنوم اور کیڈی کا ترجمہ.

کسی بھی سطح پر اردو کی خدمت انجام دینے والوں اور اردو بلاگرز کے لیے کوئی پیغام؟

@ بلاگر کافی سمجھدار ہیں اور وہ اچھی طرح جانتے ہیں کہ انہیں کیا کرنا ہے چنانچہ انہیں کسی پیغام کی ضروت نہیں.. جہاں تک اردو کی خدمت کی بات ہے تو میں کہوں گا کہ ہمیشہ اردو کی بہتری کے لیے سوچیے اور کچھ نہ کچھ کرتے رہا کیجیے.. کوئی اطلاقیہ اردوا دیجیے.. کوئی مقالہ یا مضمون ترجمہ کردیجیے.. اور کچھ نہیں تو کم از کم اپنی پسند کی کوئی کتاب ہی ٹائپ کر ماریے.. غرض کہ ہر سطح پر مواد کو بڑھانے کی اپنی سی کوشش کیجیے.. اگر سولہ کروڑ میں سے صرف ایک کروڑ لوگ ہی ایک ایک کتاب ٹائپ کرڈالیں تو ایک ہی جھٹکے میں ایک کروڑ اردو کتابیں ویب پر ہوں گی.. میری تمام بلاگروں سے بھی یہی گزارش ہے کہ اپنے بلاگ پر اپنی پسند کی کم از کم ایک کتاب ضرور ٹائپ کرکے شامل کریں اس سے اردو کو بہت فائدہ ہوگا.

تفصیلی سوالات تو کافی ہوئے۔ ایک نظر چھوٹی چھوٹی باتوں کی طرف۔

پسندیدہ:
کتاب؟

وقت کا سفر.

گیت؟

سب بکواس ہے.

فلم؟

بے کار لوگوں کا کام ہے.

کھانا؟

جینے کے لیے کھاتا ہوں.

موسم؟

گرما

صحیح/ غلط:

مجھے بلاگنگ کی عادت ہوگئی ہے۔

غلط

میں بہت شرمیلا ہوں۔

غلط

مجھے زیادہ باتیں کرنا اچھا لگتا ہے۔

غلط

میں ایک اچھا دوست ہوں۔

غلط

مجھے غصہ بہت آتا ہے۔

صحیح.

منتخب کریں یا اپنی پسند کا جواب دیں:

پاکستان یا امریکہ؟

دونوں.

ہالی ووڈ یا بالی ووڈ؟

دونوں کو بند کردینا چاہیے.

نہاری یا پائے؟

پائے.

قائد اعظم یا قائد ملت؟

فیصلہ مشکل ہے.

آم یا سیب؟

آم.

فیوژن یا جنون؟

یہ کون ہیں؟

پسند کی شادی یا ارینجڈ؟

پسند کی.

فورمز یا بلاگ؟

دونوں.

چائے یا کوک؟

چائے.

کرکٹ یا ہاکی؟

دونوں بکواس.

آخر میں کوئی خاص بات یا پیغام؟

میرا پیغام محبت ہے جہاں تک پہنچے

منظرنامہ کے لیے اپنے قیمتی وقت میں سے کچھ حصہ نکالنے کا شکریہ۔

اپنا تبصرہ تحریر کریں

اوپر