آپ یہاں ہیں
صفحہ اول > اردو بلاگنگ > منظرنامہ ایوارڈ 2008: نتائج

منظرنامہ ایوارڈ 2008: نتائج

جیسا کہ آپ کو معلوم ہے کہ منظر نامہ پر اردو بلاگرز کے ایوارڈز کا انعقاد کیا گیا تھا۔ اس سلسلے کو ایوارڈز کے چناؤ سے لے کر نامزدگیوں اور پھر ووٹنگ تک کے مراحل سے گزارا گیا۔ تین ایوارڈز کا فیصلہ آپ سب کی مشاورت کے بعد کیا گیا۔ نامزدگیوں کے لیے ہمیں کچھ خاص ردِ عمل نہیں ملا جس کی وجہ سے ہم نے ہر ایوارڈ کے لیے خود سے نام منتخب کیے اور حتمی نامزدگیوں کے لیے ہم نے اپنے تین سینئرز کا ایک پینل تشکیل دیا۔ پینل میں نبیل نقوی، زکریا اجمل اور جہانزیب اشرف شامل تھے۔ نامزدگیاں مکمل ہو جانے کے بعد ووٹنگ کا سلسلہ شروع کیا گیا۔ کل 53 لوگوں نے ووٹ دئیے جبکہ ایک ایوارڈ کے لیے 47 ووٹ ڈالے گئے اور ایک کے لیے 52 ووٹ۔

آپ لوگوں کے تبصروں سے اندازہ ہوا کہ ووٹنگ کرواتے ہوئے بلاگ کا لنک ساتھ ہونا چاہیے تھا۔ ووٹنگ فارم میں ایسا ممکن نہیں تھا۔اس وجہ سے ہم روابط نہ دے سکے۔ البتہ یہ خیال دیر سے آیا کہ پوسٹ میں روابط دئیے جا سکتے تھے۔

بہرحال، آج ہم نتائج کا اعلان کر رہے ہیں۔ ایوارڈز گرافکس تیار ہونے کے مرحلے سے گزر رہی ہیں، امید ہے جلد ہی ایوارڈز بن جائیں گے۔ اور پھر ہم  متعلقہ بلاگرز کو جاری کر دیں گے۔

نتائج کچھ اس طرح سے ہیں:

* بہترین بلاگ

راشد کامران :32 ووٹ

ساجد اقبال: 11 ووٹ

عارف انجم: 4 ووٹ

* فعال ترین بلاگ

افتخار اجمل: 10 ووٹ

بدتمیز : 11 ووٹ

میرا پاکستان : 32  ووٹ

* بہترین نیا بلاگ

ابو شامل : 39 ووٹ

خرم شہزاد: 4 ووٹ

شاہدہ اکرم: 9 ووٹ

۔۔۔۔

یوں 2008  کا بہترین بلاگ راشد کامران کا قرار پایا۔

2008 کا فعال ترین بلاگ میرا پاکستان کا منتخب ہوا۔

اور

2008 کے نئے بہترین بلاگ کا اعزاز ابو شامل(فہد) حصے میں آیا۔

سو، ہماری طرف سے آپ سب کو بہت بہت مبارک ہو۔ بلاگرز کو جلد ہی ایوارڈز جاری کر دئیے جائیں گے۔

نتائج دیکھنے کے لیے لاگ ان ہونا ضروری تھا، اس لیے آپ سب کے ایک سکرین شاٹ پیش کیا جا رہا ہے۔

35 تبصرے:

  1. مجھے پانچ چھ سے زیادہ کی اُمید نہ تھی ۔ سبب واضح ہے کہ جو کچھ میں لکھتا ہوں وہ آج کے جدید دور میں پسند نہیں کیا جاتا ۔ لیکن اللہ کی مہربانی سے میں اپنے مقصد میں کامیاب ہو رہا ہوں کیونکہ میری تحاریر پسند کرنے والوں کی تعداد دوگنا ہو گئی ہے ۔

  2. امید ہے ان ایوارڈذ سے اردو بلاگنگ کا معیار بڑھے گا اور سال 2009 میں راشد صاحب کو دوسرے بلاگرز ٹف ٹائم دیں گے۔ پچھلے سال توقع سے کم ووٹ پڑے اور امید کی جانی چاہیے کہ اس سال ووٹوں کی تعداد بہت زیادہ ہو گی۔ ویسے ہم سب کو ملکر کوئی ایسا پلان بنانا چاہیے جس سے اردو بلاگنگ کی تشہیر ہو سکے۔ یعنی اردو اخباروں میں اشتہارات وغیرہ۔ کیا خیال ہے؟

  3. سارے جیتنے والوں کو میری طرف سے بہت بہت مبارکیں
    اب میں تھوڑی سی لیسیاں کروں گا کیونکہ جیتنے والوں کی تو کرنی پڑتی ہیں نا
    تو میں یہ کہنا چاہ رہا تھا کہ ”میں نے جس جس کو ووٹ دیا تھا وہی کامیاب ہو گیا“ 😀
    اور اس ووٹنگ میں کوئی رونڈی تو نہیں پیٹی گئی نا؟ :dxx:

  4. منظر نامہ کو واپسی مبارک ہو اور خود انحصاری بھی۔ ہماری طرف سے پوری اردو بلاگنگ کمیونٹی کو ایک کامیاب ایونٹ پر مبارکباد ابو شامل اور افضل صاحب کو بھی مبارکباد اور باقی تمام اردو بلاگرز کو بھی کیونکہ ایوارڈ دراصل پوری کمیونٹی کا حق ہے جس نے ایک جمہوری عمل کی شاندار پریکٹس کی۔ 2009 کے ایوارڈز انشاء اللہ بہت ہی شاندار ہونگے کیونکہ 2008 میں اردو بلاگنگ نے بڑی تیزی سے آگے کی طرف سفر کیا ہے۔

  5. ما شاء اللہ کل تک ہم صرف باتیں کر رہے تھے اور آج نتائج بھی ہمارے سامنے ہیں.. ایک سنگِ میل ہے.. اللہ تمام بلاگروں کے حوصلے بلند کرے اور اتحاد ویگانگت برقرار رکھے.. ہماری طاقت ہمارے اتحاد میں ہی پنہاں ہے کہ:

    موج ہے دریا میں اور بیرنِ دریا کچھ نہیں..

  6. میری طرف سے بھی جیتنے والوں کو مبارکباد۔
    لگے ہاتھوں کوئی یہ بھی بتا دے کہ کس کھاتے میں، میرا بلاگ بہترین بلاگز کی فہرست میں ڈالا گیا۔ مجھے ووٹ ڈالنے والوں‌کا شکریہ، ان شاء اللہ سال 2009 میں آپکی امیدوں‌ پر پورا اتروں گااور بہترین بلاگر بن کے آپکی گلیاں پکی کرواؤں گا۔ chxmx

  7. لو جی “گننے والے نظام حکومت” نے ہمیں بھی چن لیا :hayn:
    لیکن بہت زیادہ خوشی بھی ہضم نہيں ہوتی۔ یہاں ایک جانب ہماری فتح کے اعلانات ہو رہے ہیں اور دوسری جانب ہمارے بلاگ نے ہمیں ایڈمن پینل سے دیس نکالا دے دیا ہے اور کسی صورت ہمیں داخل نہیں ہونے دے رہا 🙁
    راشد کامران صاحب اور افضل صاحب کو اعلٰی اعزازات حاصل کرنے پر ہماری جانب سے بہت بہت مبارکباد
    2009ء ایوارڈز میں بھرپور مقابلے کی توقع ہے کیونکہ بہت سارے بہترین اور فعال بلاگرز سامنے آئے ہیں۔

  8. میری طرف سے بھی تینوں جیتنے والوں کو مبارکباد،
    منظرنامہ بھی اس حوالہ سے مبارک باد کا مستحق ہے،
    لیکن ایک چیز باعث تشویش ہے کہ کل دالے گئے ووٹ صرف 53 تھے ، میرا نہیں خیال کہ اردو بلاگ پڑھنے والوں کی اتنی کمی ہے، صرف درخواست ہی کرسکتے ہیں کہ جناب اگر اردو بلاگس کا فروغ چاہتے ہیں تو اس طرح کی مثبت سرگرمیوں کے لیے وقت نکالنا ہوگا ، آپ بھی میری طرح پوسٹ نہیں لکھ سکتے نہ سہی، لیکن ایک ووٹ تو ڈال سکتے ہیں۔

  9. افتخار اجمل صاحب!
    آپ کا بلاگ فعالیت کی بنیاد پر نامزد تھا اور اسی بنیاد پر اسے ووٹ ملے۔

    قدیر احمد!
    نیک خواہشات تمہارے لیے۔

    میرا پاکستان!
    مشورہ تو اچھا ہے۔ کیوں نہ اس بارے میں بھی تجاویز کی ابتداء آپ کی جانب ہی سے ہو۔ 🙂

    ڈفر!
    منظرنامہ ایوارڈز 2009ء جیتنے کے لیے تیار ہو نا؟ 😛

    عارف انجم!
    کیوں جی؟ کیا آپ کو یقین نہیں ہے کہ آپ واقعی بہت اچھا لکھتے ہیں اور آپ کو پڑھنے والے بھی خاصی تعداد میں ہیں، بشمول میرے۔ 😉

    شعیب صفدر!
    شکریہ۔

    راشد کامران!
    بہت شکریہ دوست، حوصلہ افزائی کے لیے۔ بلاشبہ یہ صرف منظرنامہ کا نہیں بلکہ تمام اردو بلاگرز کا کارنامہ ہے اور ہم بھی امید ہے کہ اگلے سال اس سے کہیں زیادہ اچھے طریقے سے یہ کام ہوسکے گا۔

    سعود احسن!
    پہلی دفعہ 53 بھی کافی ہیں۔ ان شاء اللہ وقت کے ساتھ ساتھ تعداد بڑھتی جائے گی۔

    باقی تمام احباب کا بھی شکریہ۔

    ۔۔۔۔۔۔۔۔۔
    عمار ابنِ ضیاء

  10. میری طرف سے تمام ایوارڈ جیتنے والوں کو بہت بہت مبارک ہو۔۔۔
    منظر نامہ کو بھی مبارک باد جنہوں نے اتنا اچھا سلسلہ شروع کیا۔۔۔ اس سلسلہ سے اردو بلاگرز کو ضرور ایک تحریک ملے گی۔۔۔

اپنا تبصرہ تحریر کریں

اوپر