آپ یہاں ہیں
صفحہ اول > شناسائی > فرحت کیانی سے شناسائی

فرحت کیانی سے شناسائی

سلسلہ شناسائی میں ہم آج ایک نئی مہمان کے ساتھ حاضر ہیں۔آپ کا انٹرنیٹ اور اردو کے ساتھ کافی پرانا تعلق ہے۔ آپ کو اردو شاعری سے نہایت لگاؤ ہے۔ اردو محفل  کی ممبر ہونے کے ساتھ ساتھ اردو بلاگنگ بھی کر رہی ہیں۔ طبیعتا آپ کافی حساس اور نرم مزاج ہیں۔ دریچہ کے نام سے  بلاگ لکھتی ہیں۔ آئیں فرحت کیانی سے پوچھتے ہیں کہ دریچہ کیا ہے۔

خوش آمدیدفرحت۔

بہت شکریہ!

فرحت، سب سے پہلے ہم آپ سے اردو اور بلاگنگ کے حوالے سے بات کرتے ہیں۔

1۔  بلاگنگ کے بارے میں کب اور کیسے پتا چلا؟

@ بلاگنگ سے واقفیت تو بہت پرانی ہے۔ ہمارے گھر سپائڈر میگزین  آیا کرتا تھا۔ میرا خیال ہے  وہاں سے بلاگنگ سے تعارف ہوا۔  میرا بھائی بھی بلاگنگ کرتا تھا۔ اردو بلاگنگ کے بارے میں ۲۰۰۶ میں اردو محفل پر آنے کے بعد علم ہوا۔

2۔ کب اور کیوں سوچا کہ خود بھی بلاگنگ کرنی چاہیے؟

@ میں  وقفے وقفے سے بلاگنگ کی دنیا میں آتی جاتی رہی۔ ایک  بلاگ انا للہ ہو گیا تھا ۔ اس کے علاہ  پچھلے سال تک  یونیورسٹی میں اپنے ڈیپارٹمنٹ کے فورم پر ہم لوگ بلاگز لکھا کرتے تھے۔ لیکن وہ عموما اپنے کام سے متعلق ہوتے تھے۔

اردو بلاگنگ کے بارے میں کبھی نہیں سوچا تھا۔ محفل پر لغت پراجیکٹ میں حصہ لیا تو ان دنوں  محب علوی نے  لوگوں کو اردو بلاگنگ کی طرف راغب کرنے کی مہم شروع کر رکھی تھی ۔  یوں مجھے بھی اردو ٹیک والوں نے ایک  بلاگ سیٹ کر دیا۔  جس کے لئے ان کی بہت شکرگزار ہوں۔

3۔ بلاگ بنانے کے بعد کس قسم کے مسائل پیش آئے اور کہاں کہاں سے مدد ملی؟

@ شروع کا کچھ عرصہ بلکہ ایک سال میرا بلاگ غریب کی کٹیا کی طرح بنیادی سہولتوں سے محروم رہا۔ میرا  بلاگ  اردو پیڈ،  پلگ انز اور ویجیٹس جیسے ناموں سے نا آشنا تھا۔  میرے  پاس بھی وقت اور سمجھ دونوں کی شدید  قلت تھی ۔ سو کافی مسائل رہے۔    لیکن  جب بدتمیز کو بتایا انہوں نے بھرپور مدد کی اور یوں بلاگ کو نئے سرے سے ترتیب دینا ممکن ہوا۔

4۔ فرحت، آجکل آپ خود بھی ورڈ پریس تھیمز کو اردوا رہی ہیں۔ اس بارے میں کچھ بتائیں کہ کیسے شوق ہوا ، اور سیکھتے وقت کن مشکلات کا سامنا رہا ؟

@ تھیمز اردوانے کی زیادہ تحریک  اپنے بلاگ کے مسائل  کے ساتھ ساتھ  ماورا اور عمار کا کام دیکھ کر ہوئی۔شروع میں وقت کی کمیابی کی وجہ سے کچھ بھی نہیں کر پاتی تھی۔ پھر جوں جوں فراغت ملتی گئی سوچا بار بار دوسروں کو تنگ کرنے کے بجائے خود ہی کوشش کروں۔ کافی عرصہ سوچنے میں لگایا۔ اتنا ہی عرصہ یہ معلوم کرنے میں کہ کیا اور کیسے کیا جائے۔ جب شروع کیا تو  کچھ زیادہ مشکل پیش نہیں آئی ۔  اپنے اردگرد سے بہت مدد ملی۔ ماورا نے  راہ دکھائی اور جہانزیب نے پہلے ہی سب کچھ اپنے بلاگ پر لکھ رکھا تھا۔ چنانچہ  سی ایس ایس اور ایچ ٹی ایم ایل سے واقفیت نہ ہونے کے باوجود گزارے لائق کام سیکھ گئی۔

5۔ بلاگ کا نام دریچہ کیوں رکھا، دریچہ کے پیچھے آپ کی کیا سوچ تھی؟

@ دریچہ میرے نزدیک تازہ ہوا اور روشنی کا استعارہ ہونے کے ساتھ ساتھ بیرونی دنیا سے رابطے کا ایک ذریعہ بھی ہے۔ جب بلاگ کا نام سوچ رہی تھی تو  یہی بہتر نام لگا کہ بلاگ بھی تو آپ کے اندر اور باہرکی  دنیا کو باہم جوڑتا ہے۔

6۔ آپ بلاگ پر زیادہ تر تحریر کن موضوعات پر لکھتی ہیں؟

@ کوئی خاص موضوع تو نہیں ہوتا۔ بس وہی  چھوٹی چھوٹی باتیں جو ایک عام انسان روزمرہ زندگی میں سوچتا ہے۔ انہی میں سے کسی سوچ کو اگر الفاظ کا جامہ پہنانے میں کامیاب ہو جاؤں تو لکھ لیتی ہوں۔ ورنہ میری ۹۹ فی صد سوچیں  بس میرے دماغ  تک ہی محدود رہتی ہیں۔ بنیادی طور پر مجھے سماجی رویوں میں دلچسپی ہے۔

7۔ وقت کے ساتھ ساتھ اردو بلاگنگ کا دائرہ وسیع سے وسیع تر ہوتا چلا جارہا ہے، کیسا دیکھتی ہیں موجودہ منظرنامہ کو اور نئے آنے والے بلاگرز سے کیا توقعات وابستہ ہیں؟

@ ماشاٗاللہ اردو بلاگرز کی تعداد میں  اضافہ ہو رہا ہے جو کہ ایک خوش آئند بات ہے۔  امید تو یہی ہے کہ اانشاٗاللہ اردو بلاگنگ کا مستقبل خاصا روشن ہو گا۔ نئے بلاگرز سے یہی توقعات ہیں کہ وہ  اردو کی ترویج میں بھرپور حصہ لیں گے ۔

اس کے علاوہ  منظرنامہ بلاگ کے بارے میں بھی  کہنا چاہوں گی کہ آنے والے دنوں میں منظر نامہ  اردو بلاگنگ کا انتہائی مستند حوالہ بنتا دکھائی دیتا ہے۔

8۔ بلاگنگ کے علاوہ دیگر کیا مصروفیات ہیں؟

@ بلاگنگ کے علاوہ  انٹرنیٹ پر میرا وقت عموما  دوسروں کو پڑھنے اور گوگل کرنے میں گزرتا ہے۔

9۔ کیا آپ کے خیال میں اردو کو وہ مقام ملا ہے جس کی وہ مستحق تھی؟

@  نہیں۔کبھی تو  ایسا محسوس ہوتا ہے جیسے  اردو کے ساتھ ایک علاقائی زبان سے بھی کم درجے کا سلوک کیا  گیا ہے۔ لیکن شاید میں خود بھی اس بارے میں کچھ زیادہ نہیں جانتی ۔ کیونکہ میرا تعلق اس نسل سے ہے جنہوں نے اردو کو انگریزی کے تڑکے کے ساتھ پڑھا اور سنا ہے۔ ہمارے نزدیک اردو محض بول چال کی زبان ہے۔ اسی لئے  اکثریت یہ سمجھنے سے قاصر ہے کہ اردو کا اصل مقام کیا تھا اور اس وقت یہ زبان ریختگی کے کس مرحلے پر ہے۔

10۔ آپ کے خیال میں جو اردو کے لیے کام ہو رہا ہے کیا وہ اطمینان بخش ہے؟

@ اطمینان بخش تو نہیں۔ پھر بھی یہ احساس کہ اس ضمن میں  کام ہو تو رہا ہے کسی حد تک تسلی بخش ہے۔ میرے نزدیک اردو کا فروغ محض کسی محکمے کا فرض نہیں۔ ہم میں سے ہر ایک کا  فرض بنتا ہے کہ اپنی  زبان کو اپنے لئے فخر کا باعث سمجھیں نہ کہ شرمندگی کا۔

11۔ آنے والے دس سالوں میں اپنے آپ کو، اردو بلاگنگ کو اور پاکستان کو کہاں دیکھتی ہیں؟

@  اپنے بارے میں تو یہی  کہ اگر تب تک زندگی ہوئی تو  شاید سوچ اورعمل میں کچھ پختگی آ چکی ہو گی۔ لیکن یہ شاید والی بات ہے ۔ D:

اردو بلاگنگ کے بارے میں  امید بھی ہے اور دعا بھی  کہ آئندہ دس سالوں میں اردو بلاگرز کی کمیونٹی میں خاطر خواہ اضافہ ہو۔ جو میرے خیال میں ایسا ناممکن خیال بھی نہیں ہے۔ ماشاٗاللہ لوگوں کا  جذبہ دیدنی ہے۔  پچھلے ایک ڈیڑھ سال میں کتنے ہی لوگ اردو بلاگنگ کی طرف آئے اور  سب بہت اچھا لکھتے ہیں۔   مزید بھی آئیں گے۔  اگر لوگوں کو انٹرنیٹ پر اردو کے بارے میں درست معلومات ہوں تو  اردو بلاگرز میں خاطر خواہ اضافہ ہو سکتا ہے۔

پاکستان کے بارے میں سوچتے ہوئے دل دُکھتا ہے۔  یہی دعا  ہے  کہ حالات بہتر ہو جائیں اور پاکستان اس ڈگر پر چل نکلے جو  امن و سکون، ترقی و خوشحالی  کی اور جاتی ہے۔ لیکن بعض حقائق اس قدر تلخ ہیں  کہ نہ چاہتے ہوئے بھی  انسان مایوس ہو جاتا ہے۔ میں مایوس نہیں ، پریشان ضرور ہوں۔ بہرحال امید پر دنیا  قائم ہے۔  یہ بھی ممکن ہے (اللہ کرے) کہ آج سے دس سال بعد ہم لوگ یہیں اسی پلیٹ فارم پر پاکستان میں امن و سکون بھرے ماحول پر خوشیاں منا رہے ہوں۔

12۔ کیا آپ کو لگتا ہے کہ بلاگنگ سے آپ کو فائدہ ہوا ہے؟ یا فائدہ ہوسکتا ہے؟

@ بہت فائدہ ہو ا ہے۔  بلاگنگ کی وجہ سے   دوسروں کے تجربے اور علم سے مستفید ہونے کا موقع ملا۔   بلاگنگ کی دنیا مجھے ایک لائبریری جیسی لگتی ہے جہاں آپ جس بھی کونے میں جائیں کچھ نیا سیکھ کر ہی باہر نکلتے ہیں۔

13۔ کسی بھی سطح پر اردو کی خدمت انجام دینے والوں اور اردو بلاگرز کے لیے کوئی پیغام؟

@  جو لوگ اردو کے فروغ کے لئے کوشاں ہیں خصوصا انٹر نیٹ پر۔  ان کے لئے دل سے دعا نکلتی ہے ۔ اللہ تعالیٰ انہیں جزائے خیر عطا فرمائیں اور ان کا حوصلہ یوں ہی بلند رہے۔

اردو بلاگرز کے لئے  یہی پیغام کہ  یوں  ہی اچھے سے اچھا لکھتے رہیں۔

اب کچھ مختصر اور منفرد سوالات:

پہچان:

1۔ آپ کا نام؟

فرحت کیانی

2۔ آپ کی جائے پیدائش؟

پاکستان

3۔ آپ کا حالیہ قیام ؟

برطانیہ

4۔ آپ کی زندگی کا مقصد کیا ہے ،کوئی ایسی خواہش جس کی تکمیل چاہتی ہوں؟

میں ابھی تک زندگی کو ہی نہیں سمجھ سکی  ۔ ویسے کوشش کرتی ہوں کہ میری ذات کسی کے لئے باعثِ تکلیف  نہ بنے۔

خواہش کی بات پر یہی کہوں گی کہ

؂ کیسی خواہش ہے کہ مٹھی میں سمندر ہوتا

وسائل ہوئے  تو پاکستان میں تعلیم   کے لئے کچھ کرنا میری دیرینہ خواہش ہے۔

5۔ اپنے پس منظر اور اپنی تعلیم کے بارے میں ہمیں کچھ بتائیں گی؟

پاکستان میں پنجاب سے تعلق ہے۔

پاکستان سے تعلیم مکمل کرنے کے بعد ۲۰۰۸ میں برطانیہ سے  ’لیڈر شپ ، مینجمنٹ اینڈ چینج‘ میں پوسٹ گریجویشن   کی ہے۔

پسندیدہ:

1۔ کتاب ؟

پسندیدہ  کی بھی فہرست کافی طویل ہے

دو کتابیں  ہمیشہ میرے ساتھ ہوتی ہیں۔  مختار مسعود کی آوازَ دوست۔ اور  لوئیسا مے ایلکاٹ کی  Little Women۔ آخر الذکر میں نے پہلی بار سکول لائبریری  سے لیکر پڑھی تھی۔ بنیادی طور پر بچوں کے ادب میں آتی ہے  پھر بھی اب  تک میری پسندیدہ کتب میں سرِفہرست ہے۔

2۔ گانا ؟

ایک گانا چننا مشکل ہو جاتا ہے۔ بہرحال

نی سیو اساں نیناں دے آکھے  لگے (نصرت فتح علی  خان)

3۔ رنگ ؟

سفید اور ہلکا نیلا

4۔ کھانا) کوئی خاص ڈش (؟

ہاٹ اینڈ ساور سوپ

اور اپنی اماں کے ہاتھ سے  بنا کوئی بھی کھانا۔

5۔ موسم

سردی، بہار

غلط/درست:

1۔ مجھے اکثر اپنے کئے ہوئے پر افسوس ہوتا ہے؟

تھوڑابہت  ملال ہونا قدرتی بات ہے۔ زیادہ افسوس نہیں ہوتا۔ غلطیوں سے سیکھتی ہوں۔

2۔ مجھے بلاگنگ کی عادت ہو گئی ہے؟

کچھ کچھ

3۔ مجھے زیادہ باتیں کرنا اچھا لگتا ہے؟

درست

4۔ مجھے ابھی بہت کچھ سیکھنا ہے؟

درست

5۔ مجھے کتابیں پڑھنے کا شوق ہے؟

درست

6۔ میں ایک اچھی دوست ہوں؟

نہیں معلوم۔ البتہ میں خود دوستی کے معاملے میں بہت خوش قسمت ہوں۔

7۔ مجھے غصہ بہت آتا ہے؟

کم کم۔

8۔ میں بہت حساس ہوں؟

درست

دلچسپی:

1۔ شاعری سے؟

کافی حد تک۔  حیران ہوتی ہوں کہ  لوگ چند الفاظ میں مکمل بات کس طرح کر لیتے ہیں۔

2۔ کوئی کھیل؟

ٹیبل ٹینس

3۔ کوئی خاص مشغلہ؟

بہت سے ہیں جیسے

قدرتی مناظر سے لطف اندوز ہونا

مختلف موضوعات پر لمبی لمبی بحثیں کرنا

اور خیالی پلاؤ پکانا۔ کھانے کا موقع نہیں ملتا البتہ۔

کوئی ایک منتخب کریں :

1۔ دولت، شہرت یا عزت؟

عزت

2۔ علامہ محمد اقبال، خلیل جبران یا ولیم شکسپئر؟

اقبال

3۔ پسند کی شادی یا ارینج شادی؟

ارینج، فریقین کی باہمی رضامندی سے۔

4۔ پاکستان، امریکہ یا کوئی یورپین ملک؟

پاکستان۔ پھر امریکہ

اگر آپ سمجھتی ہیں کہ ہمیں کچھ پوچھنا چاہیے تھا، لیکن ہم نے پوچھا نہیں اور آپ کچھ کہنا چاہتی ہوں تو آپ کہہ سکتی ہیں۔

@  انتہائی مفصل انٹرویو تھا۔ سب کچھ پوچھ لیا آپ نے۔

بس بلاگرز کے علاوہ قوم کے نام بھی  پیغام دینا رہ گیا ہے وہ میں دے دیتی ہوں۔ ایسا موقع کم کم ہاتھ آتا ہے ناں D:

زندہ دلی اور سنگ دلی میں بہت معمولی فرق ہے۔   بعض اوقات ہم وقتی دل لگی کے چکر میں دوسروں  کی دل آزاری کا سبب بن جاتے ہیں۔ کوشش کرنی چاہئیے  کہ خوش دلی کے معیار کی بنیاد کسی کا مذاق اڑا نے پر نہ رکھی جائے۔

فرحت،اپنا قیمتی وقت نکال کر منظر نامہ کے لیے جواب دینے کا بہت بہت شکریہ۔

منظر نامہ کابہت شکریہ کہ مجھے یہاں بلایا ۔اور ان سب کا تو بہت ہی شکریہ جنہوں نے  اس انٹرویو کو   پڑھنے کے لئے وقت نکالا۔

17 تبصرے:

  1. مزے کی بات یہ کہ جب میں نے پہلی بار آپ کا بلاگ دیکھا تو میں سمجھا شاید آپ پرویز کیانی کی ہمشیرہ ہیں 😛
    سونے پر سہاگہ یہ کہ مجھے آپ کے بارے میں پڑھ کر مجھے یوں لگ رہا تھا جیسے میں نے ہی انٹرویو دیا ہو اور لینے والے نے کچھ ہھیر پھیر کر کے ڈال دیا ہو 😛

  2. بہت شکریہ فرحت سے متعارف کروانے کیلیے۔
    ویسے ابھی میرے ذہن میں آیا ہے کہ ہم اکثر اپنے بلاگ پر اپنے بارے میں صفحہ خالی رکھتے ہیں، کیوں‌ نے یہ انٹرویوز وہاں کاپی کر لیے جائیں یا کم ازکم لنک ہی کر دئیے جائیں۔

  3. بڑی زیادتی ہے ۔ تبصرہ کا خانہ انٹرویو سے ایک کلو میٹر دور رکھا ہوا ہے
    اللہ نے مواقع فرہم کئے اور میں نے بہت سے مُلکوں کے قسم قسم کے کھانے کھائے لیکن خیالی پلاؤ جیسا لذیذ کچھ نہ ملا ۔ کیا خُوب ہوتا ہے نہ سودا لاؤ نہ چولہا جلاؤ نہ ہاتھ ہلاؤ اور تیار ۔

  4. ویلکم فرحت ، 🙂

    امید ہے جب تک آپ کو یہاں آنے کی فرصت ملے گی ۔ تب تک آپ سفر کی تھکان شکان اتار کر فریش ہوگئیں ہونگیں ۔ میں نے آپکا ٹیکیسٹ ملنے پے جوابا کال کیا تھا ، کہ جاتے جاتے بائے ،اللہ حافظ بولوں ، مگر آپ سامان کلئیر کروانے میں بزی تھیں ۔

    امید آپکا سفر خیریت سے گزرا ہوگا ، اب جاکر واپس بھی جلدی آنے کی کریں ۔

  5. ساجد، اچھا آئیڈیا ہے، میرا انٹرویو تو ہوا نہیں، ورنہ میں نے ضرور لنک دے دینا تھا۔ سارا انٹرویو کاپی تو نہ کریں۔ لیکن اگر کچھ حصہ پیسٹ کر کے ساتھ لنک دے دیں تو زیادہ بہتر رہے گا۔
    —-
    اجمل چچا، میری طرف تو بالکل ٹھیک نظر آ رہا تھا، لیکن کسی اور کمپیوٹر سے دیکھا تو آئی ای پر واقعی تبصرے کا خانہ اتنا دور چلا گیا ہوا ہے۔ اسے دیکھتے ہیں۔
    —-

    باقی یہ کہ فرحت آجکل پاکستان میں ہیں۔ امید ہے جلد ہی آ کر آپ کے تبصروں کا جواب دیں گی۔

  6. السلام علیکم

    فرحت پچھلے ایک ماہ میں جتنی باتیں ہم دونوں نے کی ہیں اب آپ کی کمی محسوس ہو رہی ہے بہت خوشی ہوئی آپ کا انٹرویو پڑھ کر، تھینکس ٹو ماوراء اور عمار۔ جن سوالات کو مختصر نبٹایا ہے تو اب م س ن پر تفصیلات طلب کی جانی ہیں آپ سے 🙂 اور یہیں پر یاد دلا دوں آکسفورڈ اور خانس پور کی تصویریں ۔ ۔ ۔ بالکل بالکل تصویروں کی ہی بات کی ہے 🙂

  7. السلام علیکم
    سب سے پہلے تو عزت افزائی کے لئے منظر نامہ کا بہت شکریہ۔ شکریہ ادا کرنے میں کچھ تاخیر اس لئے ہوئی کہ کچھ دن بلاگنگ سے رابطہ کٹا رہا۔

    ‌@ میرا پاکستان: بہت بہت شکریہ 🙂

    @ عبدالقدوس: ہمشیرہ۔۔۔۔ یعنی میرا بلاگ اتنا قدیم لگتا ہے 😐 ۔ جنرل کیانی سے بس اتنی ہی رشتہ داری ہے جتنی ایک عام پاکستانی کی اپنی فوج کے سربراہ سے ہے :)۔

    @ ساجد اقبال: شکریہ ساجد۔ 🙂 اور بلاگ پر لنک دینے کی تجویز بھی بہت اچھی ہے۔ دعا کریں مجھے بھی ایسا کرنے کی توفیق حاصل ہو جائے۔

    @ ڈفر: بہت شکریہ 🙂

    @ افتخار اجمل بھوپال: انکل آپ کو بھی خیالی پلاؤ پسند ہے 🙂

    @ نعمان علی: بہت شکریہ :)۔ میرا ڈگری کورس واقعی بہت دلچسپ تھا۔
    دعا کریں اچھا لکھ سکوں۔

    @ بوچھی: بہت شکریہ :)۔ جی۔ مجھے بھی آپ سے بات نہ ہوسکنے کا افسوس رہا۔
    واپسی کی بات نہ کریں ابھی سے 🙁 ۔

  8. @ محمد وارث: بہت بہت شکریہ :)۔
    @ فیصل: بہت شکریہ :)۔ کاش کہ ہمارے سیاست دان کچھ پڑھنے اور سمجھنے کو تیار ہوتے 🙁
    @ ابو شامل: بہت شکریہ فہد۔ یہی بہت خوشی کی بات ہے کہ آپ لوگ میری تحریر کو قابلِ پڑھ سمجھتے ہیں :)۔ رہی تبصرے کی بات تو اس سلسلے میں میں بھی آپ ہی کی قطار میں شامل ہوں 🙂
    @ ماوراء: تاخیر سے آنے پر معذرت۔ اور لنک دینے کے لئے بہت شکریہ۔ مجھے انٹرویو کے ‘آن ایئر’ آنے کی خبر نہیں ہوئی تھی 😳
    @ شگفتہ: وعلیکم السلام
    بہت شکریہ شگفتہ۔ میں خود آپ سے بات کرنے کے لئے اداس ہو رہی ہوں۔ اور آپ کو جواب مختصر لگ رہے ہیں :0 ۔ میں نے ہر سوال کے جواب میں داستان امیر حمزہ سنا دی ہے 🙂
    تصویروں کا بالکل یاد ہے۔ ماوراء نے بھی کہا تھا۔ بس ذرا فرصت ملے تو المبز کھولتی ہوں۔
    @ شعیب سعید شوبی: بہت شکریہ :)۔ یہ تھیم بھی اردو بلاگنگ کا ہی ایک تحفہ ہے 🙂
    @ حجاب: بہت بہت شکریہ 🙂

اپنا تبصرہ تحریر کریں

اوپر