آپ یہاں ہیں
صفحہ اول > شناسائی > کاشف نصیر سے شناسائی

کاشف نصیر سے شناسائی

 منظرنامہ کے محترم قارئین، اس بار جس شخصیت سے ہمیں شناسائی کا موقعہ ملے گا ان کا نام ہے کاشف نصیر، اپنے منفرد خیالات، منفرد باتوں اور تحقیقی مضامین کی وجہ سے جانے جاتے ہیں مزید یہ کیا کیا کرتے ہیں یہی جاننے کے لیئے سلسلہ شناسائی میں پیش ہے کاشف نصیر سے شناسائی۔ تو آئیں ان کے بارے میں وقت ضائع کیئے بغیر جانتے ہیں۔
خوش آمدید !
کیسے مزاج ہیں ؟
@ اللہ کا شکر ہے۔
آپ کی جائے پیدائش کہاں ہے ؟ اور موجودہ رہائش کہاں ہے ؟
@ کراچی میں پیدا ہوا اور تادم تحریر یہیں آباد ہوں۔
اپنی تعلیم اور خاندانی پس منظر کے بارے میں کچھ بتائیں ؟
@ جامعہ کراچی سے “ایم اے ابلاغ عامہ”، اور جامعہ اردو سے “ایم بی اے” کیا ہے۔ مستقبل قریب میں ایم ایس (ابلاغ عامہ) کا ارادہ ہے۔
متوسط اور سفید پوش ہاشمی گھرانے سے تعلق ہے۔ آباو اجداد سترہویں صدی عیسویں میں وسطی ایشیائی ریاست ازبکستان سے ہجرت کرکےبھارتی ریاست بہار (ضلع سیوان) میں آباد ہوئے۔
اردو بلاگنگ کی طرف کب اور کیسے آنا ہوا ؟ آغاز کب کیا ؟
@ کسی زمانے میں اردو ویکیپڈیا پر دلچسپی ہوا کرتی تھی، ویکیپڈیا پر لکھتے لکھتے بلاگنگ کا خیال پیدا ہوا اور اس طرف نکل آیا۔
کیا مراحل طے کیے آغاز میں اور کس قسم کی مشکلات پیش آتی تھیں ؟
@ بلاگنگ کا آغاز ورڈ پریس سے کیا تھا لیکن وہاں تھیم اوررسم الخط کا مسئلہ رہتا تھا۔ پھر جب ایک فری ڈومین” ڈاٹ کو ڈٹ سی سی” کے نام سے آیا تو رسم الخط اور تھیم کے مسائل سے نجات کےلئے وہاں منتقل ہوگیا لیکن بات پھر بھی نہ بنی۔تین سال قبل اپنا ڈومین اور ہوسٹنگ خریدی اور اب وہی مستقل ٹھکانہ ہے۔ ان تمام مراحل میں قلم کارواں والے وقار اعظم کی تکنیکی مدد ہر وقت میرے ساتھ رہی ہے۔
بلاگنگ شروع کرتے ہوئے کیا سوچا تھا؟ صرف بلاگ لکھنا ہے یا اردو بلاگنگ کو فروغ دینے کا مقصد پیش نظر تھا ؟
@ مقصد تو صرف بلاگ لکھنا تھا، لیکن جیسے جیسے وقت گزرتا گیا، فطری طو ر پر یہ خواہش بھی پیدا ہوئی کہ جس پلیٹ فارم کو میں استعمال کررہا ہوں، وہ ترقی کرے۔ اس لئے جب کبھی بھی اردو بلاگنگ کے فروغ کے لئے کوئی تحریک چلتی ہے تو ساتھ دینے کا دل کرتا ہے۔
کن بلاگرز سے متاثر ہیں اور کون سے بلاگز زیادہ دلچسپی سے پڑھتے ہیں ؟
@ خاور کھوکھر، فہد کیہر اور کئی دوسرے بلاگرز نے متاثر کیا۔عنیقہ ناز، جعفر حسین، ڈفر، عمران اقبال، علی حسان، یاسر خوامخواہ، افتخار اجمل صاحب اور ریاض شاہد وغیرہ کو پڑھنے میں لطف آتا ہے۔ بلاگنگ کے ابتدائی دنوں میں عثمان (کینیڈاوالے) کو دلچسپی سے پڑھتا ہے لیکن اب وہ نہیں لکھتے۔
لفظ ” بلاگ “ سے کب شناسائی حاصل ہوئی ؟
@ شاید 2004 میں۔
اپنے بلاگ پر کوئی تحریر لکھنی ہو تو کسی خاص مرحلے سے گزارتے ہیں یا لکھنے بیٹھتے ہیں اور لکھتے چلے جاتے ہیں ؟
@ میرا نظریہ ہے کہ تخلیق کا ہر عمل آمد پر منحصر کرتا ہے، بعض اوقات آپ پورے اہتمام کے ساتھ کسی موضوع پر لکھنے بیٹھتے ہیں لیکن لاکھ کوششوں کے باوجود قلم(کیبورڈ 🙂 ) آپکا ساتھ نہیں دیتا۔ لیکن کبھی کبھی ایسا بھی ہوتا ہے کہ آپ بغیر کسی منصوبہ بندی سے لکھنا شروع کرتے ہیں اور کچھ ہی دیر میں ایک بہترین بلاگ وجود میں آجاتا ہے۔ بہرحال کچھ مضامین پر منصوبہ بندی ضروری ہوتی، خاص طور پر تحقیقی مضامین پر۔ میں نے حالیہ عام انتخابات کے دوران بیس سے زائدسیاسی مضامین لکھے اور یہ سب کچھ پیشگی منصوبہ بندی کے نتیجے میں ہی ممکن ہوا۔ یہ منصوبہ بندی شماریات کے اصولوں کے مطابق تھی، یعنی پہلے ڈیٹا کلیکشن، پھر ڈیٹا پریزینٹیشن اور آخر میں بحث ۔
کیا آپ سمجھتے ہیں کہ بلاگنگ سے آپ کو کوئی فائدہ ہوا ہے؟ یا کیا فائدہ ہوسکتا ہے؟
@ میں لکھنا چاہتا ہوں اور بلاگ مجھے اسکی آسان اور آزاد سہولت فراہم کرتا،مجھے اس سے زیادہ اور کیا چاہئے۔
آپ کی نظر میں معیاری بلاگ کیسا ہوتا ہے ؟
@ ایسا بلاگ جو آسان اور پیشہ وارانہ زبان میں مسائل اٹھائے اورانکے حل پر بحث کرے ۔ ہمارے یہاں بہت سے معیاری بلاگ ہیں لیکن مصیبت یہ ہے کہ نوے فیصد بلاگرز میری طرح صرف شوقیہ ہیں۔ پرفیکشن کے لئے ضروری ہے کے ہم اردو بلاگنگ میں پروفیشنلزام کو فروغ دیں۔
آپ کے خیال میں کیا اردو کو وہ مقام ملا ہے، جس کی وہ مستحق تھی ؟
@ میرے خیال سے نہیں ملا اور اسکی وجہ ہم خود ہیں۔ہمارا عجیب مسئلہ ہے کہ ہم انگریزی لکھ نہیں سکتے لیکن ہمیں اردو لکھنے میں شرمندگی محسوس ہوتی ہے۔ اکثر لوگ فخر سے بتاتے ہیں کہ انہیں اردو لکھنا نہیں آتی ۔ بے شک حکومت یا ریاستی ادادروں کا بھی قصور ہےلیکن سب سے زیادہ قصور ان لوگوں کا ہے اردو زبان کے چاچے مامے بنے پھرتے ہیں، میرا اشارہ ہمارے نام نہاد ادبی طبقہ کی طرف ہے۔
اردو کے ساتھ اپنا تعلق بیان کرنے کو کہا جائے تو کیسے کریں گے ؟
@ اردو کے ساتھ میرا تعلق وہی ہے جو مادری اور قومی زبان کے ساتھ کسی بھی نارمل شخص کا ہونا چاہیے۔
آپ کے خیال میں جو اردو کے لیے کام ہو رہا ہے کیا وہ اطمینان بخش ہے ؟
@ بالکل نہیں ہے، اردو کے ساتھ پہلی بیوی جیسا سلوک ہورہا ہے۔کبھی کبھی ایسا لگتا ہے کہ یہ زبان لوگوں کی مجبوری بن کر رہ گئی ہے ورنہ انہیں اس زبان میں کوئی دلچسپی نہیں ہے۔ جو حال طاہر شاہ نے انگریزی کے ساتھ کیا ہے، ہمارے مین اسٹریم کے گلوکار اردو کے ساتھ اس سے برا حال کرتے ہیں لیکن انہیں کچھ نہیں کہا جاتا۔ نیوز چینلز پر بھی زبان کا معیار گرتا جارہا اور ڈراموں میں الفاظ کی ادائیگی، لہجے اور تلفط کا بھی کوئی خیال نہیں رکھا جاتا۔ دوسری طرف جن اداروں کو اردو کی ترقی کا کام سونپا گیا ہے وہ لمبی تان کر سو رہے ہیں۔
آنے والے پانچ سالوں میں اپنے آپ کو اور اردو بلاگنگ کو کہاں دیکھتے ہیں؟
@ مستقبل میں میرا ارادہ اردو بلاگنگ کو ہی مستقل پروفیشن بنانا ہے۔ یقینی طور پر اس مقصد کے لئے مجھے وقت نکالنا پڑے گا ، اپنی خامیوں کی اصلاح کرنی ہوگی۔ میرے خیال سے اگر آپکا شوق اور پروفیشن ایک جگہ جمع ہوجائے تو مثبت نتیجہ برآمد ہوتا ہے۔
اردو بلاگنگ کا مستقبل روشن ہے، میرا خیال ہے کہ اگر اردو بلاگرز کوشش کریں تو آئندہ پانچ سالوں میں ہم انگریزی بلاگرز سے زیادہ موثر ثابت ہوسکتے ہیں۔
کسی بھی سطح پر اردو کی خدمت انجام دینے والوں اور اردو بلاگرز کے لیے کوئی پیغام؟
@ آپ ایک قومی مقصد کے لئے کام کررہے ہیں، میری دعا ہے کہ اللہ آپکو کامیاب کرے۔
بلاگ کے علاوہ دیگر کیا مصروفیات ہیں؟
@ بلاگ اور سوشل میڈیا کی مصروفیت کے علاوہ ایک نجی کمپنی میں سپلائے چین کے شعبے کے ساتھ منسلک ہوں۔
آپ کی زندگی کا مقصد کیا ہے ،کوئی ایسی خواہش جس کی تکمیل چاہتے ہوں؟
@ “زندگی کا مقصد؟” اس سوال کے جواب پر بحث میری اکثر تحاریر میں موجود ہے۔ بہت سی خواہشات ایسی ہیں جنکی تکمیل کی آس لگائے بیٹھا ہوں۔ بقول مززا صاحب کہ ہزاروں خواہشیں ایسی کہ ہر خواہش پہ دم نکلے۔
اب کچھ سوال ذرا ہٹ کے۔۔۔
پسندیدہ:
1۔ کتاب ؟
@ غبار خاطر
2۔ شعر ؟
@
 نقش فریادی ہے کسی شوخ تحریر کا
کاغذی ہے ہر پیرہن ، ہر پیکر تصویر کا
3۔ رنگ ؟
@ سفید
4۔ کھانا ؟
@ چندکھجور اور ایک گلاس دودھ
5۔ موسم ؟
@ برسات
6۔ ملک ؟
@ ترکی
7۔ مصنف ؟
@ مولانا ابولکلام آزاد
8۔ گیت؟
@ اے جذبہ دل گر میں چاہوں
9۔ فلم ؟
@ کوئی نہیں
غلط /درست:
1۔ مجھے بلاگنگ کرنا اچھا لگتا ہے ۔
@ درست
2۔ مجھے اکثر اپنے کئے ہوئے پر افسوس ہوتا ہے؟
@ درست
3۔ مجھے کتابیں پڑھنے کا بے حد شوق ہے ؟
@ درست
4۔ مجھے سیر و تفریح کرنا اچھا لگتا ہے ؟
@ درست
5۔ میں ایک اچھا دوست ہوں ؟
@ غلط (معلوم نہیں)
6۔ مجھے جلد ہی غصہ آجاتا ہے ؟
@ غلط
7۔ میں بہت شرمیلا ہوں ؟
@ غلط
8۔ مجھے زیادہ باتیں کرنا اچھا لگتا ہے ؟
@ نہیں(معلوم نہیں)
منظرنامہ کے لیئے کوئی تجویز دینا چاہیں گے ؟
@ منظر نامہ قابل لوگ چلارہے ہیں، انہیں مشوروں کی ضرورت نہیں ہے۔
آخر میں کوئی خاص بات یا پیغام ؟
@ کوئی نہیں
اپنا قیمتی وقت نکال کر منظرنامہ کو انٹرویو دینےکے لیئے آپ کا بہت بہت شکریہ۔
@ بہت شکریہ، جوابات کے لئے طویل انتظار کرانے پر معذرت۔
محمد بلال خان
محمد بلال خان کمپیوٹر سائنس کے طالب علم ہیں۔پیشے کے لحاظ سے ویب ڈویلپر ہیں۔ عام موضوعات کے علاوہ ٹیکنالوجی اور انٹرنیٹ سے متعلق سافٹ ویئر کے بارے میں بلاگ نامہ کے عنوان سے اردو بلاگ لکھتے ہیں۔ منظرنامہ انتظامیہ کا حصہ ہیں۔
http://www.mbilalkhan.pk/blog

8 تبصرے:

اپنا تبصرہ تحریر کریں

اوپر