آپ یہاں ہیں
صفحہ اول > شناسائی > ڈاکٹر جواد احمد خان سے شناسائی

ڈاکٹر جواد احمد خان سے شناسائی

منظرنامہ کے سلسلہ شناسائی کے آج کے مہمان ہیں اردو بلاگر جناب ”ڈاکٹر جواد احمد خان “ صاحب ۔ آپ ” نشتر جراح “ کے عنوان سے اردو بلاگ لکھتے ہیں۔

خوش آمدید !

کیسے مزاج ہیں ؟

@الحمد اللہ ۔۔۔ اللہ کا بڑا کرم ہے۔

اپنے بارے میں کچھ بتائیں ؟

@کہتے ہیں کہ آدمی کو اپنے اوسط درجے کے ہونے کا دیر سے پتا چلتا ہے مگر مجھے بہت پہلے ہی معلوم ہوگیا تھا ۔ کچھ بھی خاص نہیں ہے وہی کہانی ہے جو سب کی ہے۔ کوئی تیر نہیں چلایا کوئی معرکہ سر نہیں کیا۔

آپ کی جائے پیدائش کہاں ہے ؟ اور موجودہ رہائش کہاں ہے ؟

@ کراچی جائے پیدائش ہے۔ بچپن لڑکپن اور جوانی حیدرآباد میں گذری اور گذشتہ ۱۲ سال سے سعودی عرب میں مقیم ہوں۔

اپنی تعلیم، پیشہ اور خاندانی پس منظر کے بارے میں کچھ بتائیں ؟

@بہت سار ے انجینیئرز کے درمیان اکلوتا ڈاکٹر ہوں۔ والد اور تمام بھائی انجینیئرز ہیں۔

اردو بلاگنگ کی طرف کب اور کیسے آنا ہوا ؟ آغاز کب کیا ؟

@ آغاز ۲۰۱۰ میں ہوا تھا اس وقت تک میں انگریزی میں بلاگنگ کرتا تھا ۔ انگریزی بلاگنگ ابھی تک سیکیولر اور لبرلز کے ہاتھ میں ہے ۔ہر وقت بحث و مباحثہ رہا کرتا تھا ۔ ایک بار مباحثہ کے دوران ایک مشکل تبصرے کے جواب میں نیٹ کھنگالتے ہوئے مرحومہ عنیقہ ناز کا بلاگ نظر سے گذرا تو یہیں کا ہو گیا ۔ شروع میں سب سے بڑی مشکل اردو ٹائپنگ کی تھی جس کے لیے میں گوگل ٹرانسلٹریشن کا استعمال کیا کرتا تھا بعد میں ایم بلال ایم کا اردو انسٹالر نظر سے گذرا جس نے یہ مشکل آسان کردی۔

کیا مراحل طے کیے آغاز میں اور کس قسم کی مشکلات پیش آتی تھیں ؟

@مشکل کام وہ ہوتا ہے جو آپ دوسرے کی مرضی سے کرتے ہیں۔ بلاگنگ کا شوق تھا ۔ کام کا معاملہ ” آم کے آم گھٹلیوں کے دام ” والا تھا لہذا بہت سارا قت تھا اس لیے نا مراحل کا پتا چلا اور نا ہی مشکلات کا۔

بلاگنگ شروع کرتے ہوئے کیا سوچا تھا؟ صرف بلاگ لکھنا ہے یا اردو بلاگنگ کو فروغ دینے کا مقصد پیش نظر تھا ؟

@بلاگنگ کرنے کا مقصد اپنے آپ کو ہم خیال لوگوں سے ہم آہنگ کرنا تھا۔ انگریزی بلاگنگ میں چونکہ اجنبی تھا اس لیے اردو بلاگنگ کرتے ہوئے ایک خوشگوار تبدیلی کا احساس ہوا۔

کن بلاگرز سے متاثر ہیں اور کون سے بلاگز زیادہ دلچسپی سے پڑھتے ہیں ؟

@میں تقریباً تمام ہی بلاگرز سے بہت زیادہ متاثر ہوں جسکی وجہ محبت کا رشتہ اور انکے لکھنے کی اعلیٰ صلاحیتیں ہیں۔ ۔سلیم بھائی، یاسر خواہ مخواہ جاپانی، خاورکھوکھر،کاشف نصیر ، علی حسن، جعفرحسین ، عمر بنگش اور دوسرے تمام بلاگرز ہیں جو اچھا لکھتے ہیں۔ سب کے نام لینا بھی مشکل ہے۔ عدنان مسعود اور راشد کامران کی زبان دانی سے متاثر ہوں۔ وقار اعظم سے خاص طور پر متاثر ہوں کیونکہ یہ بندہ دکھنے میں عام اور لا ابالی سا نظر آتا ہے مگر صلاحیتیں اور معلومات غضب کی ہیں۔ برادر فہد کیہر اور برادر عمران مسعود سے مجھے گلہ یہ ہے کہ انہوں نے روایتی بلاگنگ کو ہلکے پھلکے انداز میں لیا ہے۔ ۔ تقریباً تمام بلاگرز میں کوئی نا کوئی ایسی خوبی نظر آئی ہے جو اسے دوسروں سے ممتاز کرتی ہے۔

لفظ “ بلاگ ” سے کب شناسائی حاصل ہوئی ؟

@ ۲۰۰۷ سے

آپ پیشہ کے لحاظ سے ڈاکٹر بھی ہیں اس بارے میں بتائیں کہ اس جانب کیسے آنا ہوا ؟

@زبردستی لایا گیا ہوں جناب۔۔۔۔ میں تو آرمی میں جانا چاہتا تھا ۔ اباّ جان سے کہا تو انہوں نے فرمایا کہ اسکا دماغ خراب ہوگیا ہے تو جناب گھر والوں کا نام روشن کرنے کے لیے ڈاکٹر بن گیا

کیا ڈاکٹری اور بلاگنگ ایک ساتھ آسانی سے کرلیتے ہیں ؟

@بلاگنگ میرے لیے آسان کام نہیں ہے اگر مجھے کلّی فراغت ہو تب بھی نہیں۔ جب تک تحریک نا ہو لکھ نہیں پاتا اور لکھنے میں بھی مجھے زیادہ کوفت الفاظ کے چناؤ اور سطروں کی آپس میں ہم آہنگی قائم کرنے میں ہوتی ہے۔ لکھنے کی صلاحیت نا ہونے کی وجہ سے لکھنا ایک بوجھ ہی محسوس ہوتا ہے۔

ڈاکٹر ہونے کے کوئی تین فوائد اور نقصانات بتائیں؟

@ ایک خاص قسم کا اسٹیٹس اور قبولیت حاصل ہوجاتی ہےاسکے علاوہ اسکا کوئی فائدہ نہیں ہے۔ نقصانات میں سب سے بڑا نقصان یہ ہے کہ input بہت زیادہ ہے جبکہ out put بہت کم اور بہت دیر سے آتا ہے۔اتنی محنت اگر انسان کسی اور فیلڈ میں کرے تو بہت آگے چلا جاتا ہے۔

 

اپنے بلاگ پر کوئی تحریر لکھنی ہو تو کسی خاص مرحلے سے گزارتے ہیں یا لکھنے بیٹھتے ہیں اور لکھتے چلے جاتے ہیں ؟

@ مجھے ان لوگوں پر رشک آتا ہے جو لکھتے ہیں تو لکھتے چلے جاتے ہیں۔ سنا ہے عنیقہ ناز مرحومہ آدھے گھنٹے میں بلاگ لکھ لیا کرتی تھیں۔

کیا آپ سمجھتے ہیں کہ بلاگنگ سے آپ کو کوئی فائدہ ہوا ہے؟ یا کیا فائدہ ہوسکتا ہے؟

@جی ہاں بہت فوائد حاصل ہوئے ہیں۔ سب سے بڑا فائدہ یہ ہوتا ہے کہ بلاگنگ ایک فلٹر کا کام کرتی ہے ۔ آپ کے اندر دلیل کی قوت ، مشاہدہ ، باریک بینی اور قوت محادثہ کو بڑھادیتی ہے اور آپ چیزوں کو سمجھنے کے لیے تمام تر جزیات کا خیال رکھنے کے عادی ہوجاتے ہیں۔پھر آپ تجزیہ دلائل و رد کی ایک وسیع و عریض دنیا میں جا نکلتے ہیں۔ محبت کے رشتے قائم ہوجاتے ہیں۔ پرانے تعصبات ٹوٹتے ہیں اور نئے تعصبات قائم ہوجاتے ہیں۔

آپ کی نظر میں معیاری بلاگ کیسا ہوتا ہے ؟

@معیاری بلاگ کچھ نہیں ہوتا اصل بات ابلاغ کی اور اس ابلاغ کے لیے کیے جانے والی مشق کی ہے ۔ کسی کا ابلاغ ادبی ہوتا تو کسی کا میری طرح عامی ۔

آپ کے خیال میں کیا اردو کو وہ مقام ملا ہے، جس کی وہ مستحق تھی ؟

@ جی نہیں اردو کا یہ مقام تھا کہ یہ قومی زبان ہوتی تعلیمی اور دفتری زبان ہوتی ۔ ترقی اور ترویج کی مستحق تھی مگر کالے انگریز نے یہ سب کچھ ہونے نہیں دیا۔میرے نزدیک قوم کسی قوم کے زوال کی سب سے بڑی نشانی یہ ہے کہ وہ اپنی زبان اور اپنی تہذیب کو ترک کرتے ہوئے اغیا ر کی نقالی شروع کردیتی ہے۔

اردو کے ساتھ اپنا تعلق بیان کرنے کو کہا جائے تو کیسے کریں گے ؟

@ زبان آپکی ذات کا ایک بہت بڑا حصہ ہوتی ہے اس لیے اس تعلق کو بیان کرنے کی ضرورت نہیں ہے۔

آپ کے خیال میں جو اردو کے لیے کام ہو رہا ہے کیا وہ اطمینان بخش ہے ؟

@ بالکل نہیں ۔۔۔بہت کچھ ہونا باقی ہے

آنے والے پانچ سالوں میں اپنے آپ کو اور اردو بلاگنگ کو کہاں دیکھتے ہیں؟

@ مستقبل انگریزی بلاگنگ کا نہیں بلکہ اردو بلاگنگ کا ہے ۔ اسکا اپنا ایک سحر ہے اپنی ایک کشش ہے۔ جس جس گھر میں نیٹ جائے گا وہاں وہاں اردو بلاگنگ جائے گی مگر اہستگی کے ساتھ

کسی بھی سطح پر اردو کی خدمت انجام دینے والوں اور اردو بلاگرز کے لیے کوئی پیغام؟

@ آپ جو کچھ کر رہے ہیں وہ کسی تعریف کا محتاج نہیں محمد بلال خان، ایم بلال ایم یا دوسرے اگر ایک لفظ نا بھی لکھیں تب بھی انہوں نے اب تک جو کچھ کیا ہے اور جو کچھ آئندہ کریں گے اسے اردو زبان کا مورخ نظر انداز نہیں کرسکے گا

بلاگ اور کلینک کے علاوہ دیگر کیا مصروفیات ہیں؟

@اچھی کتاب

آپ کی زندگی کا مقصد کیا ہے ،کوئی ایسی خواہش جس کی تکمیل چاہتے ہوں؟

@دکھتی رگ پر ہاتھ رک دیا ہے آپ نے ۔۔۔۔ میں جو کچھ چاہتا ہوں وہ ٹائم مشین ایجاد ہوئے بغیر نہیں ہوسکتا۔

 

اب کچھ سوال ذرا ہٹ کے۔۔۔

 

پسندیدہ:

 

1۔ کتاب ؟

@ Art of war, The Devil’s alternative, behold a pale horse,، علی پور کا ایلی ، پیار کا پہلا شہر ، راجہ گدھ ، اور بہت ساری کتابیں ۔ مجھے ابھی تک یہ سمجھ نہیں آیا کہ میری پسندیدہ کتاب کونسی ہے

2۔ شعر ؟

@ مجھے منیر نیازی کی نظم ” ہمیشہ دیر کردیتا ہوں میں ” بہت زیادہ پسند ہے۔ اس نظم میں ، میں ہوں۔

3۔ رنگ ؟

@ سیاہ

4۔ کھانا ؟

@ یہ سوال میری پول کھول سکتا ہے

5۔ موسم ؟

@ نم آلود جاڑا اور جاڑوں کی رات کہ جب سکوت ہر شئے پر محیط ہوجاتا ہے

6۔ ملک ؟

@ پاکستان ۔۔۔ اس جیسا ملک اللہ تعالیٰ نے دوسرا نہیں بنایا۔ اور ہم نے اسے برباد کردیا

7۔ مصنف ؟

@ مولانا مودودی رحمۃ اللہ علیہ

8۔ گیت؟

@ میں گانوں سے سخت پرہیز کرتا ہوں اس لیے نہیں کہ میرا تقویٰ بلند ہے بلکہ اس لیے کہ یہ مجھے اس دنیا میں لے جاتے ہیں جہاں میں جانا نہیں چاہتا۔

9۔ فلم ؟

@ I am a legend

 

غلط /درست:

 

1۔ مجھے بلاگنگ کرنا اچھا لگتا ہے ۔

@ درست / غلط

2۔ مجھے اکثر اپنے کئے ہوئے پر افسوس ہوتا ہے؟

@ درست

3۔ مجھے کتابیں پڑھنے کا بے حد شوق ہے ؟

@ درست

4۔ مجھے سیر و تفریح کرنا اچھا لگتا ہے ؟

@ غلط

5۔ میں ایک اچھا دوست ہوں ؟

@ درست

6۔ مجھے جلد ہی غصہ آجاتا ہے ؟

@ غلط

7۔ میں بہت شرمیلا ہوں ؟

@ درست

8۔ مجھے زیادہ باتیں کرنا اچھا لگتا ہے ؟

@ غلط

 

منظرنامہ کے لیئے کوئی تجویز دینا چاہیں گے ؟

@ صرف ایک تجویز کہ آپ جو کچھ کر رہے ہیں اسے اسی وقت ترک کیجیئے گا کہ جب کوئی دوسرا یہ کام کرنے کے لیے تیار ہوجائے

آخر میں کوئی خاص بات یا پیغام ؟

@ایک عام آدمی کوئی خاص بات کیسے کرسکتا ہے ۔ ہاں ایک بات جو میں نے سمجھی ہے وہ شیئر کرنا چاہتا ہوں کہ ہم لوگ تماشائی ہیں ہمیں تماشہ نہیں بننا چائیے۔

 

اپنا قیمتی وقت نکال کر منظرنامہ کو انٹرویو دینےکے لیئے آپ کا بہت بہت شکریہ

@ میں آپکا اور منظر نامہ کا نہایت مشکور ہوں کہ مجھے انٹرویو کے قابل سمجھا۔

ٹیگ
محمد بلال خان
محمد بلال خان کمپیوٹر سائنس کے طالب علم ہیں۔پیشے کے لحاظ سے ویب ڈویلپر ہیں۔ عام موضوعات کے علاوہ ٹیکنالوجی اور انٹرنیٹ سے متعلق سافٹ ویئر کے بارے میں بلاگ نامہ کے عنوان سے اردو بلاگ لکھتے ہیں۔ منظرنامہ انتظامیہ کا حصہ ہیں۔
http://www.mbilalkhan.pk/blog

17 تبصرے:

  1. بہت اعلیٰ۔۔۔ ڈاکٹر صاحب کی شاندار شخصیت ان کی تحاریر سے ہی واضح ہو جاتی ہے۔۔۔

    مجھے ان سے کئی بار فون پر بات کرنے کا شرف حاصل ہوا ہے۔۔۔ اور یقین جانیے کہ سچے، کھرے اور نہایت نفیس انسان ہیں۔۔۔ بس آج کل ایک شیطان کی بیند بجانے میں مصروف ہیں۔۔۔ اللہ انہیں کامیاب کرے۔۔۔ آمین۔۔۔

    1. عمران بھائی آپ ایک رقیق القلب اور محبت کرنے والے انسان کے طور پر جانے جاتے ہیں اور جب اپکے خلاف کچھ دیکھتا ہوں تو یقین مانیے بہت غصہ آتا ہے۔ میں تو خاموش ہی ہوگیا تھا مگر جو حرکت آپکے خلاف ہوئی وہ ناقابل برداشت تھی۔

  2. ڈاکٹر صاحب کو پہلے پہل میں نے عنیقہ ناز مرحومہ کے بلاگ پہ دیکھا۔ خود تو کبھی تبصرہ کرنے کی ہمت د نہ کرپایا مگر ڈاکٹر صاحب کے اسلام کی محبت سے سرشار تبصرے پڑھتا اور اپنے ایمان کو جلاء دیتا۔ یہی تبصرے ان سے غائبانہ محبت کا باعث بن گئے۔ ان کیلئے یہ گناہ گار دعا گو رہتا ہے بلکہ اس بار تو ختم تراویح میں ڈاکٹر صاحب کے ساتھ ساتھ عنیقہ ناز مرحومہ بھی یاد آگئیں۔

  3. بڑے ہی عمدگی سے نہ کم نہ زیادہ الفاظ کا استعمال کیا بہت جامع انداز اپنا کر بہت اچھے جواب دئے ۔میں آپ کے قریب قریب سارے ہی تحاریر پڑھی ہوں بہت اچھا لکھتے ہیں ماشاءاللہ ۔۔۔۔اللہ آپ کے ہاتھ میں شفاء عطا فرمائے بہت ترقی کریں

اپنا تبصرہ تحریر کریں

اوپر